نا محرم سے محبت کا انجام

نا محرم کی محبت نشے کے انجیکشن کی طرح ہوتی ہے جس کو رگوں میں لگایا جاتا ہے اور یہ نشہ آہستہ آہستہ خون میں گردش کرنا شروع کر دیتا ہے شروع شروع میں اس کا اثر کم ہوتا ہے لیکن وقت کے ساتھ ساتھ اس کا اثر بڑھ جاتا ہے انسان مدہوشی کے عالم میں رہتا ہے بدحواسی چھا جاتی ہے کسی چیز کا ہوش نہیں رہتا انسان خود سے ہی خود کو بے دخل کر دیتا ہے۔ ایک نا ختم ہونے والی مایوسی کے سوا اس نشے میں کچھ نہیں رکھا۔ یہ نشہ انسان کا پیچھا اس وقت تک نہیں چھوڑتا جب تک انسان کی آخری رگ بھی ناکارہ نہیں ہو جاتی اور وہ موت کو گلے نہیں لگا لیتا۔ یہ وہ واحد نشہ ہے جو انسان کو قبر تک لے جاتا ہے اور انسان صرف گناہوں کا بوجھ لیے ہزاروں من مٹی کے نیچے دب جاتا ہے۔

admin

Read Previous

شادی کیوں ضروری ہے؟ اور قرآن و حدیث کی روشنی میں نکاح کی کیا فضیلت ہے؟

Read Next

حافظ قرآن انس محمدی کی خوبصورت نعت

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *